آئینِ جواں مرداں

روسی استبداد کے خلاف سالہا سال تک برسرِ پیکار رہنے والے عالمِ اسلام کے عظیم چھاپہ مار رہنما [[امام شامل]] رحمۃ اللہ علیہ کو روسی جرنیل وارنسٹوف نے ستمبر 1844ء میں قفقار پہنچ کر ایک خط لکھا کہ تم پانچ لفظوں اطاعت، فرماں برداری، ماتحتی، باج گزاری اور درخواست میں سے جو چاہو منتخب کرلو۔اس کے جواب میں امام شامل رحمۃ اللہ علیہ نے لکھا:

وارنسٹوف مجھے تمہارے شہنشاہ پر ترس آتا ہے کہ وہ تم جیسے بوڑھے اور ازکارِرفتہ نام نہاد جرنیل کا سہارا لینے پر مجبور ہو گیا ہے۔ اگر تم حقیقی جرنیل ہوتے تو تمہیں یہ علم ضرور ہوتا ہے ایک سپہ سالار دوسرے سپہ سالار سے کس طرح بات کرتا ہے۔تمہیں تو اتنا بھی علم نہیں کہ سپاہی گفتگو کا آغاز تلوار سے کرتاہے۔زبان کے استعمال کی نوبت اس وقت آتی ہے جب تلوارغالب یا عاجز آجائے۔ تمہاری اطلاع کے لیے یہ عرض ہے کہ قفقار میں کوئی یہ نہیں جانتاہے وارنسٹوف کس چڑیا کا نام ہے۔مگر ایک نام ایسا ہے جسے صرف جنوبی روس ہی میں نہیں،پورے روس میں،پورے قفقار میں ہر کوئی جانتاہے۔تمہارے زاروں، جرنیلوں ،افسروں اور سپاہیوں کے قبرستانوں میں مدفون لاکھوں لوگوں کی روحیں بھی اس نام سے واقف ہیں اوریہ نام ہے’شامل‘۔
ہاں ہم غیر مہذب ہیں کیونکہ
ہم دوسروں کے ملک پر قبضہ نہیں کرتے،
ہم دوسروں کو اپنا غلام نہیں بناتے،
ہم مخالفوں کے باغات،کھیتیاں اور گھر نذرِ آتش نہیں کرتے اور ان کے کنویں بند کرکے اُنہیں پیاس سے نہیں تڑپاتے،
ہم کسی فانی انسان کو اپنا خداوند،آقا اور اپنی زندگیوں کا مالک نہیں تسلیم کرتے۔
ہم غیر مہذب ہیں کیونکہ
ہمارے یہاں ماتحتوں کی بیویاں اپنے اعلیٰ افسروں کی بانہوں میں نہیں جھولتیں،
ہمارے یہاں غریب مائیں اپنی چھاتیاں اپنے آقاوں کے کتوں کے منہ میں نہیں دیتیں،
ہمارے یہاں خادم اپنے آقاوں کے کتوں کو گرمی پہنچانے کے لیے ساری رات اپنی گود میں لے کر نہیں بیٹھتے۔
وارنسٹوف!
تم نے کہا کہ میں پانچ الفاظ میں سے ایک لفظ منتخب کرلوں۔میں تمہارے پانچوں الفاظ مسترد کرتا ہوں۔میرے منتخب کردہ پانچ الفاظ یہ ہیں
اللہ کی راہ میں جہاد

آپ یہ صفحات بھی دیکھنا پسند کریں گے ۔ ۔ ۔

3 تبصرے

  1. سبحان اللہ۔
    امام شامل میری پسندیدہ ترین ہستیوں میں سے ایک ہیں۔ براہ کرم اگر ان کے متعلق اردو میں کوئی اچھی کتاب موجود ہو تو اسکا نام تحریر کر دیں۔
    ویسے اگر کوئی امریکی جرنیل ہمارے ”سپہ سالار“ کو 5 الفاظ منتخب کرنے کا کہتےتو وہ کیا لکھے گا؟ 😛 سب سے پہلے پاکستان؟؟؟؟

  2. ابوشامل says:

    ساجد بھائی! میں ان کے بارے میں کوئی مکمل کتاب پڑھی تو نہیں البتہ اتنا معلوم ہوا ہے کہ فیروز سنز والوں نے "امام شامل" کے نام سے ایک کتاب شائع کی تھی، وہ حاصل کی جا سکتی ہے اس کے علاوہ میں مزید معلومات کر کے آپ کو بتا دوں گا۔
    امریکی جرنیل پاکستانی ہم منصب کو 5 نہیں صرف ایک لفظ منتخب کرنے کا کہتے ہیں "ہاں" یا "نہیں" 🙂

  3. اللہ پاک کی قسم!
    میری تو آنکھیں کھل گئیں، کہ سپہ سالار ہوتا کیا شے ہے۔ ایک ہمارے سپہ سالار ہیں، ان بد نصیبوں کے حصے میں ذلت و رسوائ کے سوا کچھ نہیں۔

    کیا خیال ہے نظامی صاحب! اسی بات پر مجلس عمل کا ذکر ہوجائے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *